اہم خبریں متفرق خبریں

حکومت سازی کے لیے ملاقات، تو کیا بلاول اور شہباز کا مناظرہ ہو گیا؟

فروری 11, 2024 2 min

حکومت سازی کے لیے ملاقات، تو کیا بلاول اور شہباز کا مناظرہ ہو گیا؟

Reading Time: 2 minutes

لاہور میں پیپلز پارٹی کے صدر آصف علی زرداری، چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سے سابق وزیراعظم محمد شہباز شریف کی بلاول ہاؤس میں ملاقات ہوئی ہے۔

اتوار کی شام ملاقات کے بعد مشترکہ اعلامیے میں کہا گیا کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) اور پاکستان پیپلز پارٹی میں سیاسی تعاون پر اصولی اتفاق رائے ہے۔

مشترکہ اعلامیے میں کہا گیا کہ ملاقات میں ملک کی مجموعی صورتحال اور مستقبل میں سیاسی تعاون پر تفصیلی بات چیت کی گئی۔

سوشل میڈیا صارفین اس ملاقات کی تصاویر شیئر کر کے پوچھ رہے ہیں کہ کیا پھر مناظرہ ہو گیا؟

بلاول بھٹو زرداری نے الیکشن مہم کے دوران شریف برادران کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا تھا اور نواز شریف کو مناظرے کا چیلنج دیا تھا۔

لاہور میں ملاقات کے بعد اعلامیے میں کہا گیا کہ قائدین کا ملک کو سیاسی استحکام سے ہم کنار کرنے کے لیے سیاسی تعاون کرنے پر اتفاق ہوا ہے۔

کہا گیا ہے کہ سیاسی عدم استحکام سے ملک کو بچائیں گے، دونوں جماعتوں کے قائدین کا اصولی اتفاق اس بات پر بھی ہوا۔

ملاقات میں دونوں جماعتوں نے صورتحال پر مشاورت کی اور تجاویز پر تبادلہ خیال کیا۔

پی پی پی قیادت نے کہا کہ مسلم لیگ ن کی تجاویز کو سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس میں سامنے رکھیں گے،

دوبوں جماعتوں کے قائدین نے کہا کہ عوام کی اکثریت نے ہمیں مینڈیٹ دیا ہے، ہم عوام کو مایوس نہیں کریں گے۔

مسلم لیگ ن کے وفد میں اعظم نذیر تارڑ، ایاز صادق، احسن اقبال، رانا تنویر، خواجہ سعد رفیق، ملک احمد خان، مریم اورنگزیب اور شزا فاطمہ شامل تھے۔

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے